آئی ایم ایف وفد اور معاشی ٹیم کا تعارفی سیشن، حکومتی اقدامات کی تعریف


 اسلام آباد:  پاکستان اور عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) میں مذاکرات کا آغاز ہوگیا۔

وزارت خزانہ میں آئی ایم ایف وفد اور معاشی ٹیم کے درمیان تعارفی سیشن ہوا، آئی ایم ایف وفد کی قیادت نیتھن پوٹر جبکہ وفاقی وزیر خزانہ محمد اونگ زیب نے معاشی ٹیم کی قیادت کی۔

تعارفی سیشن کے دوران وزیر خزانہ، گورنر سٹیٹ بینک، چیئرمین ایف بی آر نے وفد کو بریفنگ دی۔

اس دوران چیئرمین ایف بی آر نے رواں مالی سال کا ٹیکس ہدف حاصل کرنے کا پلان دیا اور وفد کو یقین دہانی کرائی کہ نئے ٹیکس لگائے بغیر رواں مالی سال کا ہدف حاصل کر لیا جائے گا۔

وفد نے معاشی استحکام کیلئے حکومتی اقدامات کو سراہتے ہوئے کہا کہ پاکستان کو معاشی استحکام کیلئے سخت معاشی پالیسیاں اختیار کرنا ہوں گی۔

وفاقی وزیر خزانہ محمد اورنگزیب نے کہا کہ آئی ایم ایف کے ساتھ مل کر معاشی پالیسیوں پر عمل پیرا ہیں۔

تعارفی سیشن کے بعد آئی ایم ایف وفد وزارت خزانہ سے روانہ ہوگیا۔

عالمی مالیاتی ادارے کا وفد پاکستانی حکام کے ساتھ 18 مارچ تک اقتصادی جائزہ کیلئے مذاکرات کرے گا، آئی ایم ایف حکام کی وزارت خزانہ، وزارت توانائی، ایف بی آر، سٹیٹ بینک، پلاننگ کمیشن اور پٹرولیم ڈویژن کے اعلیٰ عہدیداروں سے بھی ملاقاتیں ہوں گی۔

قبل ازیں نیتھن پورٹر کی قیادت میں عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) کا وفد وزارت خزانہ پہنچا، وفد سے تعارفی سیشن کیلئے معاشی ٹیم بھی وزارت خزانہ پہنچی، وزیرخزانہ، گورنر سٹیٹ بینک، چیئرمین ایف بی آر وزارت خزانہ پہنچے۔

0/Post a Comment/Comments

before post content

after post