غزہ پر اسرائیلی حملوں کو 90 روز مکمل، 22 ہزار سے زائد فلسطینی شہید


 غزہ : غزہ پر اسرائیلی کے وحشیانہ حملوں کو 90 دن ہوگئے، اسرائیلی جارحیت کے نتیجے میں اب تک 22 ہزار سے زائد فلسطینی شہید جبکہ لاکھوں بے گھرہوچکے ہیں ۔

حماس میڈیا آفس نے اسرائیلی حملوں سے متعلق اعداد و شمار جاری کر دیے ، اسرائیلی حملوں میں 57 ہزار 614افراد زخم ہزار سے زائد فلسطینی لاپتہ ہیں۔

حماس کے مطابق صیہونی فورسز نےغزہ کے 30ہسپتالوں کومکمل طور پر غیرفعال کردیا ہے ، 6 ہزار شدید زخمیوں کو علاج کے لیے فوری سفر کرنے کی ضرورت ہے تاہم صرف 645 زخمی علاج کے لئے غزہ سے باہر لے جائے گئے ، کینسر کے 10 ہزار مریض زندگی اور موت کی کشمکش میں مبتلاہیں ۔

حماس نے کہا کہ اسرائیلی فوج نے 90 دن میں 65 ہزار ٹن بارود غزہ پر برسایا، 53 صحت مراکز مکمل تباہ اور 150 مراکز کو جزوی طور پر نقصان پہنچا، قابض فوج نے 121 ایمبولینسیں تباہ کر دیں۔

حماس کے مطابق صحت کے 99 اہلکار گرفتار اور 10صحافی حراست میں لیے گئے، غزہ میں 13 لاکھ 55 ہزار افراد نقل مکانی کے نتیجے میں متعدی بیماریوں سے متاثر ہوئے۔

ادھر پناہ گزین کیمپوں پر اسرائیلی طیاروں کی بمباری جاری ہے ، 24 گھنٹوں میں بمباری سے مزید162 فلسطینی شہید اور 296افراد زخمی ہوگئے۔

غزہ کے علاقے رفاہ میں اسرائیلی بمباری سےپورا خاندان شہید ہوگیا ، صیہونی فورسز کی جانب سے اسلامی جہاد کے آپریشنل کمانڈر ممدوح لولو کو شہید کرنے کا دعویٰ کیا گیا ہے ۔

اسرائیلی فوج کا کہنا ہے کہ 24گھنٹوں میں 100سے زائد فضائی حملے کئے گئے ہیں ، جنگ کے بعد غزہ کا کنٹرول حماس کے پاس نہیں رہنے دینگے۔

 قابل ذکر ہے کہ اسرائیلی وزیر دفاع یوآف گیلنٹ نے جمعرات کو کہا کہ فوجی دستے شمالی غزہ کی پٹی میں جلد ہی فضائی حملے کرنے کے مقصد سے خود کو دوبارہ منظم کر رہے ہیں۔

0/Post a Comment/Comments