بانی پی ٹی آئی کو پارٹی صدارت سے ہٹانے سے متعلق کیس کا فیصلہ محفوظ


 اسلام آباد:  الیکشن کمیشن نے بانی چیئرمین پی ٹی آئی کو پارٹی صدارت سے ہٹانے سے متعلق کیس پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔

سابق چیئرمین پی ٹی آئی کے وکیل شعیب شاہین الیکشن کمیشن میں پیش ہوئے، درخواست گزار خالد محمود ایڈووکیٹ بھی الیکشن کمیشن کے روبرو پیش ہوئے۔

وکیل شعیب شاہین نے مؤقف اپنایا کہ ہم نے انٹرا پارٹی انتخابات کا ریکارڈ الیکشن کمیشن میں جمع کروا دیا ہے، اب اس کیس کو ختم ہو جانا چاہیے، قانونی طور پر یہ معاملہ ختم ہوگیا ہے کیونکہ پارٹی کا نیا چیئرمین آگیا ہے۔

بانی چیئرمین پی ٹی آئی کے وکیل نے کہا کہ اگر آپ اس کیس کو چلانا چاہتے ہیں تو اکبر ایس بابر پٹیشن دائر کر رہے ہیں اس کے ساتھ چلا لیں۔

چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ آپ درخواست گزار کو موقع دے رہے ہیں کہ وہ نئے چیئرمین کے خلاف بھی پٹیشن دائر کرے۔

اس موقع پر درخواست گزار نے الیکشن کمیشن سے استدعا کی کہ آپ آرڈر میں لکھ کر دے دیں کہ بانی چیئرمین سزا یافتہ ہیں وہ پارٹی کا کوئی عہدہ نہیں رکھ سکتے جس پر چیف الیکشن کمشنر نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ بانی پی ٹی آئی نے الیکشن لڑا ہی نہیں اس میں ہم کچھ نہیں کہہ سکتے ہیں۔

بعدازاں الیکشن کمیشن نے بانی چیئرمین پی ٹی آئی کو پارٹی عہدے سے ہٹانے سے متعلق کیس کا فیصلہ محفوظ کر لیا۔

0/Post a Comment/Comments