نگران وفاقی وزیر اطلاعات مرتضیٰ سولنگی

 نگران وفاقی وزیر اطلاعات مرتضیٰ سولنگی


نگران وفاقی وزیر اطلاعات مرتضیٰ سولنگی کا انفارمیشن سروس اکیڈمی میں 38 ویں مڈ کیریئر مینجمنٹ کورس اور 40 ویں سپیشلائزڈ ٹریننگ پروگراموں کی گریجویشن تقریب سے خطاب

پروپیگنڈے اور بیانیہ کے دور میں انفارمیشن گروپ کے افسران کی اہمیت میں کئی گنا اضافہ ہو گیا ہے، مرتضیٰ سولنگی

پروپیگنڈے کے مقابلے اور پاکستان کے مثبت تشخص کے فروغ میں انفارمیشن گروپ کے افسران کا اہم کردار ہے، مرتضیٰ سولنگی

سول سروس کے بہت سے دیگر گروپس کے برعکس انفارمیشن گروپ کے افسران اپنی صلاحیتوں کو بہتر بنانے کے لئے مسلسل مطالعہ اور سخت محنت کرتے ہیں، مرتضیٰ سولنگی

انفارمیشن گروپ کے افسران کو نہ صرف میڈیا، میڈیا قوانین بلکہ سیاست، تاریخ، جغرافیہ، آرٹ، ثقافت، موسیقی اور ملک کی زبانوں کے بارے میں بھی سیکھنا چاہئے، مرتضیٰ سولنگی

انفارمیشن گروپ کے افسران تیزی سے بدلتے ہوئے میڈیا منظر نامے کو اپنانے پر توجہ مرکوز کریں، مرتضی سولنگی

جب انٹرنیٹ اور سوشل میڈیا متعارف ہوئے تو یہ خیال کیا جاتا تھا کہ معلومات کا ایک نیا دور شروع ہورہا جس سے مین سٹریم میڈیا پر انحصار ختم ہو جائے گا، مرتضیٰ سولنگی

 لیکن بدقسمتی سے سوشل میڈیا پر ایک نئی ”سیاسی معیشت“ ایجاد ہو چکی ہے، مرتضیٰ سولنگی

سوشل میڈیا پر متمول افراد جعلی خبریں پھیلانے اور بوگس ٹرینڈ بنانے کے لئے چند درجن لوگوں کی خدمات حاصل کر سکتے ہیں، مرتضیٰ سولنگی

پاکستان کی مقامی زبانوں میں متنوع ثقافت موجود ہے، انفارمیشن گروپ کے افسران پاکستان کی مقامی زبانیں سیکھیں، مرتضیٰ سولنگی

کسی کو اپنی زبان میں پیغام پہنچانا ہمیشہ آسان ہوتا ہے، مرتضیٰ سولنگی

جدید ٹیکنالوجی کے دور میں سچائی پھیلانے میں تاخیر دوسروں کو جعلی خبروں اور پروپیگنڈے سے خلا کو پُر کرنے کا موقع دے گی، مرتضیٰ سولنگی

جدید دور کے چیلنجز سے نمٹنے کے لئے انفارمیشن گروپ کی ری سٹرکچرنگ ناگزیر ہے، وفاقی سیکریٹری اطلاعات

انفارمیشن سروس اکیڈمی کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر طارق محمود نے خطبہ استقبالیہ دیا اور دونوں کورسز کے اغراض و مقاصد پر روشنی ڈالی

وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات مرتضیٰ سولنگی نے دونوں کورسز کے شرکاءمیں اسناد تقسیم کیں

ایڈیشنل سیکرٹری اطلاعات و نشریات سید مبشر توقیر شاہ اور ایم ڈی ایسوسی ایٹڈ پریس آف پاکستان محمد عاصم کھچی سمیت وزارت اطلاعات و نشریات کے سینئر افسران بھی اس موقع پر موجود تھے۔

0/Post a Comment/Comments